حکومت نے آئی ایم ایف کی ایک اور اہم ترین شرط پور ی کی تیاری کر لی

28

اسلام آباد( این این آئی)حکومت نے عالمی مالیاتی فنڈ کی ایک اور شر ط پور ی کرنے کی تیاری کر لی ہے ۔تفصیلات کے مطابق مسابقتی کمیشن آئی ایم ایف کے پبلک انویسٹمنٹ مینجمنٹ اسسمنٹ کے تحت انشورنس سیکٹرپراسٹڈی کرے گا ،انشورنس اورری انشورنس مارکیٹوں میں ریاستی ملکیت والیاداروں کے کردار کا بھی جائزہ لیا جائے گا،غیرملکی انشورنس کمپنیاں پاکستانی مارکیٹ میں داخل ہونے کی طرف راغب ہوں گی، اس تجزیہ سے معلوم ہو گا کہ یہ شعبہ پاکستان میں کیوں پسماندہ ہے، اس شعبے کو بین الاقوامی صنعت کاروں کے لیے کیسے کھولا جا سکتا ہے۔

مسابقتی کمیشن کے مطابق پاکستان کی انشورنس انڈسٹری کو ریگولیٹری رکاوٹوں اور کمپٹیشن رکاوٹوں کی وجہ سے ابھی تک اپنی پوری صلاحیت کے ادراک کا موقع نہیں مل سکاہے۔کئی سالوں سے حکومت کے نجکاری کے ایجنڈے پر ہونے کے باوجود، اسٹیٹ لائف انشورنس کمپنی لمیٹڈ اور پاکستان ری انشورنس کمپنی لمیٹڈ سمیت انشورنس کمپنیوں کی نجکاری ابھی تک عمل میں نہیں آئی ہے، سی سی پی اس وقت معیشت کے پانچ دیگر شعبوں کے قانونی اور ریگولیٹری فریم ورک کا تجزیہ کرنے میں مصروف ہے، ان سٹڈیز کا مقصد بین الاقوامی سرمایہ کاروں کے لیے شعبوں کو کھولنا، کمپٹیشن کو بڑھانا اور بہتر مصنوعات کی فراہمی ہے۔ ان شعبوں میں فرٹیلائزر، انشورنس، پاور، سڑک کی تعمیر، اور مائع قدرتی گیس (ایل این جی)شامل ہیں۔انشورنس اسٹڈی کی سفارشات مناسب وقت پر وفاقی حکومت کو ارسال کر دی جائیں گی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published.