دو لوگوں کی جان لینے والے بااثر نوجوان کو 300 الفاظ کا مضمون لکھنے پر رہائی مل گئی

9

پونے(این این آئی)بھارت کے شہر پونے میں ایک خوفناک کار حادثہ پیش آیا جس کے نتیجے میں موٹرسائیکل سوار میاں بیوی جاں بحق ہوگئے۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق شراب کے نشے میں دھت 17 سالہ نوجوان کار ڈرائیور نے اپنی گاڑی سے موٹر سائیکل اور دیگر گاڑیوں کو ٹکر ماری جس کے بعد جائے وقوعہ ہر مجمعے نے گاڑی کو گھیرے میں لے لیا۔بھارتی میڈیا نے بتایا کہ کم عمر نوجوان ایک مشہور بزنس مین کا بیٹا ہے جس نے اپنی لگژری گاڑی سے موٹر سائیکل پر سوار میاں بیوی کو اپنی تیز رفتار گاڑی سے ٹکر ماری، جس کے بعد وہ زندگی کی بازی ہار گئے۔ بھارتی پولیس نے لڑکے اور اس کے والد کی شناخت ظاہر نہیں کی۔پولیس کے مطابق حادثہ رات ڈھائی بجے کے قریب پیش آیا جب موٹرسائیکل سوار میاں بیوی انیس ددھیا اور اشونی کوسٹا اپنی منزل پر رواں تھے۔

پولیس کا کہنا تھا کہ شوہر کی موقع پر ہی موت ہوگئی، جب اس کی اہلیہ اسپتال پہنچنے کے بعد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئی۔بھارتی پولیس نے بتایا کہ نوجوان کی گاڑی کی نمبر پلیٹ بھی موجود نہیں تھی۔معاملہ جب عدالت پہنچا تو عدالت نے کم عمر نوجوان کی رہائی پر انوکھی شرائط عائد کردیں جن میں 15 دن تک ٹریفک پولیس کے ساتھ کام کرنا، نفسیاتی تشخیص اور طبی معائنہ کروانا، سڑک حادثات اور ان کے حل کے لیے 300 الفاظ پر مشتمل مضمون لکھنا ڈرگ ایڈکشن سنٹر کی بحالی، ٹریفک قوانین کا مطالعہ کرنے کے بعد جووینائل جسٹس بورڈ کو بیان دینا، مستقبل میں حادثے کے شکار متاثرین کو مدد فراہم کرنا شامل ہیں۔پولیس چاہتی تھی ڈرائیور کے خلاف بالغ ہونے پر مقدمہ چلایا جائے مگر عدالت کی جانب سے کم عمر نوجوان کو انوکھی طرز کی مشروط ضمانت دے دی گئی جس پر بھارتی پولیس کا کہنا تھا کہ عدالت نے اس کیس کو سنجیدگی سے نہیں لیا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published.