ہائیکورٹ نے چینی کی قیمتیں مقرر کرنے کے نوٹیفکیشن پر عملدرآمد تاحکم ثانی معطل کر دیا

7

لاہور ( این این آئی) لاہور ہائیکورٹ نے چینی کی قیمتیں مقرر کرنے کے شوگر ایڈوائزی بورڈ کے نوٹیفکیشن پر عمل درآمد تاحکم ثانی معطل کردیا۔ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد کریم نے جہانگیر ترین کی جے ڈی ڈبلیو سمیت شوگر ملوں کی درخواستوں پر سماعت کی۔

درخواست گزار شوگرملوں کے وکیل نے بتایاکہ عدالت نے چینی کی قیمتوں میں اضافے سے قبل شوگر ملوں سے مشاورت ضروری قرار دی، عدالتی حکم کے برعکس محکمہ خوراک نے ملوں سے مشاورت کے بغیر چینی کی قیمتوں کو مقرر کر دیا گیا، چینی کے ایکس ملز ریٹ 80روپے فی کلو اور مارکیٹ ریٹ 90روپے فی کلو کر دیئے گئے، شوگر ایڈوائزی بورڈ نے قیمتوں کا تعین کرتے ہوئے ملوں کا موقف سن کر اعتماد میں نہیں لیا، شوگر ایڈوائزی بورڈ کے یکطرفہ فیصلہ سے کاروبار متاثر ہوگا۔درخواست میں استدعا کی گئی کہ عدالت شوگر ایڈوائزی بورڈ کے اس یکطرفہ فیصلہ پر عمل درآمد معطل کرتے ہوئے ملوں کے خلاف تادیبی کارروائی روکنے کا حکم دے۔جس پر عدالت نے چینی کی قیمتیں مقرر کرنے کے شوگر ایڈوائزی بورڈ کے نوٹیفکیشن پر عمل درآمد تاحکم ثانی معطل کر دیا۔عدالت نے سیکرٹری فوڈ پنجاب ،ڈی جی انڈسٹری پنجاب اور شوگر ایڈوائزی بورڈ کو نو ٹس جاری کرتے ہوئے 4 مئی کو رپورٹ طلب کرلی۔

موضوعات:لاہور ہائیکورٹ

جانوروں سے بھی بدتر

ہسکی برفیلے علاقوں کے کتے ہیں‘ یہ سائبیریا‘ مشرقی یورپ اور قطب شمالی میں پائے جاتے ہیں‘ بھیڑیے کی نسل سے ہیں‘ جسمانی لحاظ سے طاقتور ہوتے ہیں اور سردی اوربھوک برداشت کر جاتے ہیں‘ برفیلے علاقوں کے لوگ انہیں برف گاڑی میں جوت کران سے باربرداری کا کام لیتے ہیں اور ہسکی کتے لوگوں اور سامان کو گھسیٹ کر ….مزید پڑھئے‎

ہسکی برفیلے علاقوں کے کتے ہیں‘ یہ سائبیریا‘ مشرقی یورپ اور قطب شمالی میں پائے جاتے ہیں‘ بھیڑیے کی نسل سے ہیں‘ جسمانی لحاظ سے طاقتور ہوتے ہیں اور سردی اوربھوک برداشت کر جاتے ہیں‘ برفیلے علاقوں کے لوگ انہیں برف گاڑی میں جوت کران سے باربرداری کا کام لیتے ہیں اور ہسکی کتے لوگوں اور سامان کو گھسیٹ کر ….مزید پڑھئے‎

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published.